39

معافی دیدی تو کابل سے روانگی کیوں؟ طالبان نے پی آئی اے کی 3 پروازیں روک دیں

کراچی: پی آئی اے کا کابل فضائی آپریشن التوا کا شکار ہوگیا، طالبان نے کابل سے افغان باشندوں کو نکالنے کی یورپی یونین کی درخواست مسترد کرتے ہوئے پی آئی اے کی تین پروازوں کو ان مسافروں کو لے جانے سے روک دیا۔

پنجاب ٹائمز نیوز کے مطابق قومی ائرلائن کا افغانستان کے لیے فلائٹ آپریشن پیر کو منسوخ ہوگیا، کابل کے لیے پی آئی اے انتظامیہ کی جانب سے تین پروازیں روانہ کرنے کا پلان ترتیب دیا گیا تھا۔ ترجمان پی آئی اے عبداللہ خان نے تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ فضائی آپریشن کچھ تکنیکی وجوہات کی بنا پرعارضی طور پر روک دیا گیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ یورپی یونین نے پی آئی اے حکام سے جن مسافروں کے فضائی سفر کے لیے درخواست کی ہے وہ تمام کے تمام افغان شہری ہیں۔ فضائی آپریشن کے تحت ان مسافروں کو کابل سے پاکستان آنا تھا بعد ازاں انھیں یورپ اور امریکا روانہ ہونا تھا تاہم طالبان کی جانب سے ان مسافروں کو فضائی سفر کی اجازت نہیں دی جارہی۔
اس حوالے سے طالبان کا موقف ہے کہ جب انھوں نے عام معافی کا اعلان کردیا تو پھر ان افراد کے روانہ ہونے کا کوئی جواز نہیں بنتا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اس تمام ترصورتحال میں پی آئی اے کا پاکستان سے کابل کے لیے فضائی آپریشن اگلے کئی روز تک التوا کا شکار ہوسکتا ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں