31

بھارتی شہریوں کو کرتارپور راہداری جانے کی اجازت

اسلام آباد : این سی او سی نے بابا گرو نانک دیو جی کی آئندہ برسی کے پیش نظر ہندوستانی سکھ یاتریوں کو کوویڈ پروٹوکول پر عمل کرتے ہوئے گوردوارہ دربار صاحب کرتارپور جانے کی اجازت دے دی ہے۔

این سی او سی اجلاس کے دوران کرتارپور راہداری کے ذریعے ہندوستانی سکھ یاتریوں کی نقل و حرکت پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وبا کے بڑھتے پھیلاؤ کے دوران ہندوستان 22 مئی سے 12 اگست تک کیٹگری سی ممالک کی فہرست میں رہا ہے۔ سکھ یاتریوں کو خصوصی اجازت کے ذریعے ضروری نقل و حرکت کی اجازت دی گئی ہے۔ اس ضمن میں یقینی بنایا جائے گا کہ صرف مکمل طور پر ویکسین شدہ افراد کو پاکستان میں داخل ہونے کی اجازت ہوگی۔

صحافیوں کو ہراساں کرنے کا کیس ، 5 رکنی لارجر بنچ قائم ، قاضی فائز عیسیٰ حصہ نہیں
پاکستان کے سفر سے قبل منفی RT PCR ٹیسٹ زیادہ سے زیادہ 72 گھنٹے پرانا ساتھ رکھنا لازم ہو گا ۔ پاکستان آنے پر آر اے ٹی ٹیسٹ مثبت نتائج کی صورت میں کسی فرد کو آنے کی اجازت نہیں دی جائے گی ۔ پاکستان میں داخل ہونے کے لیے فی الحال نافذ کردہ این پی آئیز کے مطابق زیادہ سے زیادہ 300 افراد کے بیرونی اجتماع کی اجازت ہو گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں