37

افغانستان میں مداخلت نہیں کررہے صرف امن کی حمایت کریں گے، وزیراعظم

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ افغانستان کے معاملے میں مداخلت نہیں کررہے صرف امن کی حمایت کریں گے، افغانستان سے متعلق جو فیصلہ افغان عوام کا ہوگا پاکستان اسی کے ساتھ ہے، امریکا نے افغان جنگ میں اربوں ڈالر لگائے تو اس میں پاکستان کا کیا قصور؟

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت حکومتی ترجمانوں کا اجلاس منعقد ہوا جس میں افغانستان کی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ پاک افٍغان بارڈر پر باڑ لگانے، بارڈر کی صورتحال، افغان امن عمل پر مشاورت کی گئی۔

یہ پڑھیں : افغانستان کی کشیدگی میں پاکستان کا کوئی پسندیدہ نہیں، آرمی چیف
اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان اب کسی جنگ کا متحمل نہیں ہوسکتا، پاکستان کی پالیسی واضح ہے کہ افغانستان میں ہمارا کوئی فیورٹ نہیں ہم نیوٹرل رہیں گے۔

انہوں نے کہا کہ افغان فوجیوں کو امریکیوں نے تربیت دی، امریکا نے افغان جنگ میں اربوں ڈالر لگائے تو اس میں پاکستان کا کیا قصور؟ ہمیں اس جنگ میں کیوں درمیان میں لایا جاتا ہے؟ ہمیں سرحد پر باڑ لگانی تھی وہ ہم نے لگادی۔

یہ بھی پڑھیں : امریکا کا پارٹنر اب بھارت ہے اس لئے پاکستان سے مختلف سلوک ہورہا ہے، وزیراعظم

وزیر اعظم نے مزید کہا کہ پاکستان کی معیشت بہتر جا رہی ہے، افغانستان کے حالات خراب ہونے کا اثر پاکستان پر پڑتا ہے، 2009ء میں امریکا کو خط لکھا تھا کہ افغان مسئلے کا حل فوجی طاقت نہیں، 2009ء میں کہی ہماری باتیں آج پوری ہوتی نظر آرہی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں