46

پی ٹی وی پارلیمنٹ کا مقصد پارلیمنٹ کی کارروائی عوام تک پہنچانا تھا ، مریم اورنگزیب

مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا کہ پی ٹی وی پارلیمنٹ کا مقصد پارلیمنٹ کی کارروائی عوام تک پہنچانا تھا۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب نے قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ 2018 میں ہم نے پی ٹی وی پارلیمنٹ متعارف کروائی ۔
انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ کی کمیٹی کا مقصد کارروائی کو کور کرنا تھا لیکن حکومت کی وہ ترجیح نہیں رہی اس کے لیے بجٹ نہیں رکھا گیا ، پی ٹی وی میں 121 پروڈیوسرز ہیں لیکن انہوں نے اکیس پراڈکشن بھی نہیں دیں ، فلم کلچر پالیسی، آٹسکٹ پراڈکشن پر کوئی توجہ نہیں دی گئی۔
مسلم لیگ ن کی ترجمان نے کہا کہ وزیر پہلے جب وزیر اطلاعات بنے تھے صحافی سڑکوں پر تھے لیکن 2018 سے 2021 تک پارلیمنٹ حکومت کی ترجیح نہیں رہی ، پی ٹی وی کا مسئلہ ڈیجیٹل نہیں پروڈکشن ہے۔
مریم اورنگزیب نے کہا کہ پی ٹی وی میں 121 پروڈیوسر کام کر رہے ہیں ، اگر انہوں نے 21 پروڈکشن بھی نہیں دی تو میں استعفی دے دوں ، وزیر اعظم نے بڑی پاکستانیت کی بات کی ، مسلم لیگ ن نے کلچر فلم پالیسی کا کام کیا تھا۔
انہوں نے کہا کہ ہم نے آرٹسٹ فنڈ رکھا تھا ، وہ آرٹسٹ فنڈ بجٹ میں نظر نہیں آ رہا ، صحافیوں کی سیکورٹی کا مسئلہ ہے ، صحافیوں کو پارکس میں گولیاں ماری جا رہی ہیں ان پر حملے ہو رہے ہیں ، ایک سال میں 140 حراسگی حملے ہوئے ہیں صحافیوں پر۔
مسلم لیگ ن کی ترجمان نے کہا کہ وزارت صحافیوں کی سیکورٹی کے حوالے سے جلدی قانون سازی کرے ، صحافیوں کی سنسر شپ جان کا مسئلہ ہے ، میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی اظہار رائے کی آزادی پر حملے کے مترادف ہے ، ایسا قانون نہ لائیں جو اظہار رائے کی آزادی کا قتل عام کرے۔
مریم اورنگزیب نے کہا کہ پی آئی ڈی صرف اپوزیشن کو گالیاں دینے کے لیے استعمال ہوئی ہے ، آج بھی ہمارے بچے کسی بھی معلومات کے لیے غیر ملکی مواد پر انحصار کر رہے ہیں ، آپ کو صحافیوں کو تحفظ دینا ہو گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں