29

سنگدل ماں نے ٹی وی دیکھنے کے معاملے پر باپ کی حمایت کرنے پر بیٹی کو مار ڈالا

بھارت میں سنگدل ماں نے ٹی وی دیکھنے کے معاملے پر باپ کی حمایت کرنے پر اپنی 3 سالہ بیٹی کو جان سے مار دیا۔

بھارتی ریاست کرناٹکا کے شہر بینگالورو میں 26 سالہ سنگدل ماں نے شوہر کے ساتھ معمولی جھگڑے کے دوران اپنی 3 سالہ بیٹی کو جان سے ماردیا جب کہ پولیس نے فوری طور پر ایکشن لیتے ہوئے سدھا کو حراست میں لے لیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق سدھا اور اس کے شوہر کے درمیان ٹی وی پر پروگرام دیکھنے کے حوالے سے معمولی جھگڑا ہوا تھا اس دوران ان کی 3 سالہ بیٹی نے اپنے باپ کی حمایت کی تو ماں کو شدید غصہ آیا اور اگلے دن جب اس کا شوہر گھر پر موجود نہیں تھا تو اس نے اپنی بیٹی کو گلا گھونٹ کر ماردیا۔
کہانی میں دلچسپ موڑ اس وقت آیا جب سدھا اپنے شوہر کے ہمراہ پولیس اسٹیشن پہنچی اور اپنی بیٹی کی گمشدگی کی رپورٹ درج کروائی۔ پولیس کو دیے گئے بیان میں 26 سالہ سدھا نے کہا کہ وہ اپنی بیٹی کے ساتھ ایک اسٹور پر گئی تھی اور جب وہ بل دینے لائن میں لگی تو پیچھے اس کی بیٹی موجود نہیں تھی۔

پولیس کے مطابق انہوں نے واقعے کی تفتیش شروع کی تو انہیں سدھا کے بیان پر شک ہوا جس پر ہم نے اس سے مزید سوالات کیے اور آخر کار اس نے اپنا جرم قبول کرتے ہوئے کہا چونکہ میری بیٹی مجھ سے زیادہ اپنے باپ کی طرف داری کرتی تھی اور اسے زیادہ پسند کرتی تھی اس لیے میں نے اسے مار دیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں