43

درکھانہ و گرد نواح میں زیر زمین پانی آلودہ و جراثیم زدہ ھوچکا ھے پانی میں پیلاہٹ اور بدبو کا عنصر نمایاں ھوتا ھے

(درکھانہ مہر فیصل حیات سے)
درکھانہ و گرد نواح میں زیر زمین پانی آلودہ ،مختلف چکوک کو پانی سپلائی کرنے والی پائپ لائنیں بوسیدہ ،پانی میں پیلاہٹ جراثیموں کی آمیزش مکین موذی امراض میں مبتلا ھونے لگے
درکھانہ و گرد نواح میں زیر زمین پانی آلودہ و جراثیم زدہ ھوچکا ھے پانی میں پیلاہٹ اور بدبو کا عنصر نمایاں ھوتا ھے مکین ہیپاٹائٹس سی،ٹائیفائیڈ،گردوں اور معدہ کے موذی امراض میں مبتلا ہونے لگے درکھانہ سے کئی چکوک کی ہزاروں آبادی کو پانی واٹر سپلائی پائپ لائنوں کے ذریعے سپلائی کیا جاتا ھے کئی سال قبل ڈالی جانے والی پلاسٹک کی پائپ لائن کئی جگہ سے ناکارہ ہو چکی ہے پائپ لائنوں کے بوسیدہ ھونے سے مٹی اور گندگی پانی میں شامل ھو کر پانی کو آلودہ کر رہی ہے پانی میں پیلاہٹ جراثیموں کی آمیزش نمایاں ھوتی ھے واٹر سپلائی پائپ لائنوں کے ذریعے سپلائی کیا جانے والا پانی بھی موذی امراض کے پھیلاؤ کا سبب بن رہا ہے ترقی کے اس دور میں بھی درکھانہ بار و گھگھ بار کی عوام زندگی کے بنیادی اور اہم جزو پانی سے محروم ھے اہل علاقہ نے وزیراعظم پاکستان عمران خان وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار ڈی سی خانیوال سے مطالبہ کیا ہے کہ درکھانہ و گھگھ بار کو پینے کے صاف پانی کی فراہمی یقینی بنائی جائے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں